25 C
Lahore
Tuesday, October 19, 2021

کراچی میں قتل ہونے والے ٹک ٹاکرز کے معاملے میں چند اہم انکشافات

کراچی (تازہ ترین) آج صج کراچی میں قتل ہونے والے چار ٹک ٹاکرز کے معاملے میں مزید انکشافات سامنے آئے ہیں۔ چند ذرائع کے مطابق ٹک ٹاکرسٹارز پر فائرنگ کرنے والے ملزم رحمان کا کرمنل ریکارڈ بھی سامنے آیا ہے۔ اس ریکارڈ کے مطابق رحمان منشیات فروش ہے۔ ملزم نے چند دن قبل مسکان کو لاکھوں روپے مالیت کا موبائل فون تحفے میں دیا تھا اور دونوں کے مابین دوستی تھی، ٹک ٹاکر مسکان ایک طلاق یافتہ خاتون ہے اور اس کی ایک بیٹی بھی ہے۔

ذرائع کے مطابق مسکان کے اہلخانہ نے اس سے اظہارِ لاتعلقی کر رکھا تھا۔ علاوہ ازیں مقتول ٹک ٹاکرز کا بھی کرمنل ریکارڈ سامنے آیا ہے۔ صدام حسین کے خلاف منشیات فروشی اور ہوائی فائرنگ کے مقدمات درج ہیں۔

واضح رہے کہ منگل کی صبح کراچی کے علاقے گارڈن میں انکلسرا ہسپتال کے قریب ایک انتہائی افسوسناک واقعہ پپش آیا تھا جہاں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے ٹک ٹاکر مسکان شیخ سمیت 4 افراد جاں بحق اور دو زخمی ہو گئے تھے۔

مقتولہ مسکان اور عامر کا کچھ ماہ قبل رحمان نامی لڑکے سے جھگڑا ہوا تھا، اس وقت بھی جھگڑے کے دوران رحمان نے فائرنگ کی تھی۔ پولیس اب رحمان نامی شخص کو گرفتار کر کے مزید تفتیش کرے گی جس سے اہم حقائق سامنے آئیں گے۔ تفتیشی حکام کا دعویٰ ہے کہ ممکنہ طور پر لڑکی کے واقف کار نے ہی گاڑی پر فائرنگ کی۔ مقتولین کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ تمام ٹک ٹاکرز تھے اور آپس میں دوست تھے۔

مسکان لانڈی کی رہائشی تھی۔ ایس ایس پی سٹی سرفراز نواز نے فائرنگ کے واقعے متعلق مفصل بیان جاری کرتے ہوئے بتایا کہ کار پر فائرنگ کا واقعہ صبح پونے پانچ بچے پیش آیا۔ واردات میں ایک موٹرسائیکل اور رکشے کا استعمال کیا گیا، ایس ایس پی سٹی سرفراز نواز کے مطابق ملزمان نے کار کا پیچھا کرنے کے بعد اس پر فائرنگ کی۔ ملزمان کی فائرنگ سے کار میں سوار مسکان موقع پر ہی جاں بحق ہوئیں جبکہ باقی تین ٹک ٹاکر سٹارز حملہ میں زخمی ہونے کے بعد دوران علاج جاں بحق ہوئے۔

کراچی (تازہ ترین) آج صج کراچی میں قتل ہونے والے چار ٹک ٹاکرز کے معاملے میں مزید انکشافات سامنے آئے ہیں۔ چند ذرائع کے مطابق ٹک ٹاکرسٹارز پر فائرنگ کرنے والے ملزم رحمان کا کرمنل ریکارڈ بھی سامنے آیا ہے۔ اس ریکارڈ کے مطابق رحمان منشیات فروش ہے۔ ملزم نے چند دن قبل مسکان کو لاکھوں روپے مالیت کا موبائل فون تحفے میں دیا تھا اور دونوں کے مابین دوستی تھی، ٹک ٹاکر مسکان ایک طلاق یافتہ خاتون ہے اور اس کی ایک بیٹی بھی ہے۔

ذرائع کے مطابق مسکان کے اہلخانہ نے اس سے اظہارِ لاتعلقی کر رکھا تھا۔ علاوہ ازیں مقتول ٹک ٹاکرز کا بھی کرمنل ریکارڈ سامنے آیا ہے۔ صدام حسین کے خلاف منشیات فروشی اور ہوائی فائرنگ کے مقدمات درج ہیں۔

واضح رہے کہ منگل کی صبح کراچی کے علاقے گارڈن میں انکلسرا ہسپتال کے قریب ایک انتہائی افسوسناک واقعہ پپش آیا تھا جہاں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے ٹک ٹاکر مسکان شیخ سمیت 4 افراد جاں بحق اور دو زخمی ہو گئے تھے۔

مقتولہ مسکان اور عامر کا کچھ ماہ قبل رحمان نامی لڑکے سے جھگڑا ہوا تھا، اس وقت بھی جھگڑے کے دوران رحمان نے فائرنگ کی تھی۔ پولیس اب رحمان نامی شخص کو گرفتار کر کے مزید تفتیش کرے گی جس سے اہم حقائق سامنے آئیں گے۔ تفتیشی حکام کا دعویٰ ہے کہ ممکنہ طور پر لڑکی کے واقف کار نے ہی گاڑی پر فائرنگ کی۔ مقتولین کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ تمام ٹک ٹاکرز تھے اور آپس میں دوست تھے۔

مسکان لانڈی کی رہائشی تھی۔ ایس ایس پی سٹی سرفراز نواز نے فائرنگ کے واقعے متعلق مفصل بیان جاری کرتے ہوئے بتایا کہ کار پر فائرنگ کا واقعہ صبح پونے پانچ بچے پیش آیا۔ واردات میں ایک موٹرسائیکل اور رکشے کا استعمال کیا گیا، ایس ایس پی سٹی سرفراز نواز کے مطابق ملزمان نے کار کا پیچھا کرنے کے بعد اس پر فائرنگ کی۔ ملزمان کی فائرنگ سے کار میں سوار مسکان موقع پر ہی جاں بحق ہوئیں جبکہ باقی تین ٹک ٹاکر سٹارز حملہ میں زخمی ہونے کے بعد دوران علاج جاں بحق ہوئے۔

کراچی (تازہ ترین) آج صج کراچی میں قتل ہونے والے چار ٹک ٹاکرز کے معاملے میں مزید انکشافات سامنے آئے ہیں۔ چند ذرائع کے مطابق ٹک ٹاکرسٹارز پر فائرنگ کرنے والے ملزم رحمان کا کرمنل ریکارڈ بھی سامنے آیا ہے۔ اس ریکارڈ کے مطابق رحمان منشیات فروش ہے۔ ملزم نے چند دن قبل مسکان کو لاکھوں روپے مالیت کا موبائل فون تحفے میں دیا تھا اور دونوں کے مابین دوستی تھی، ٹک ٹاکر مسکان ایک طلاق یافتہ خاتون ہے اور اس کی ایک بیٹی بھی ہے۔

ذرائع کے مطابق مسکان کے اہلخانہ نے اس سے اظہارِ لاتعلقی کر رکھا تھا۔ علاوہ ازیں مقتول ٹک ٹاکرز کا بھی کرمنل ریکارڈ سامنے آیا ہے۔ صدام حسین کے خلاف منشیات فروشی اور ہوائی فائرنگ کے مقدمات درج ہیں۔

واضح رہے کہ منگل کی صبح کراچی کے علاقے گارڈن میں انکلسرا ہسپتال کے قریب ایک انتہائی افسوسناک واقعہ پپش آیا تھا جہاں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے ٹک ٹاکر مسکان شیخ سمیت 4 افراد جاں بحق اور دو زخمی ہو گئے تھے۔

مقتولہ مسکان اور عامر کا کچھ ماہ قبل رحمان نامی لڑکے سے جھگڑا ہوا تھا، اس وقت بھی جھگڑے کے دوران رحمان نے فائرنگ کی تھی۔ پولیس اب رحمان نامی شخص کو گرفتار کر کے مزید تفتیش کرے گی جس سے اہم حقائق سامنے آئیں گے۔ تفتیشی حکام کا دعویٰ ہے کہ ممکنہ طور پر لڑکی کے واقف کار نے ہی گاڑی پر فائرنگ کی۔ مقتولین کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ تمام ٹک ٹاکرز تھے اور آپس میں دوست تھے۔

مسکان لانڈی کی رہائشی تھی۔ ایس ایس پی سٹی سرفراز نواز نے فائرنگ کے واقعے متعلق مفصل بیان جاری کرتے ہوئے بتایا کہ کار پر فائرنگ کا واقعہ صبح پونے پانچ بچے پیش آیا۔ واردات میں ایک موٹرسائیکل اور رکشے کا استعمال کیا گیا، ایس ایس پی سٹی سرفراز نواز کے مطابق ملزمان نے کار کا پیچھا کرنے کے بعد اس پر فائرنگ کی۔ ملزمان کی فائرنگ سے کار میں سوار مسکان موقع پر ہی جاں بحق ہوئیں جبکہ باقی تین ٹک ٹاکر سٹارز حملہ میں زخمی ہونے کے بعد دوران علاج جاں بحق ہوئے۔

Related Articles

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Stay Connected

22,046FansLike
2,984FollowersFollow
18,400SubscribersSubscribe

Latest Articles