26 C
Lahore
Tuesday, October 19, 2021

کھانا بناتے ہوئے ان اشیا کو پھینکنے کے بجائے چہرے پر لگائیں اور بیوٹی پارلر جیسا نکھار پائیں

اکثر گھریلو خواتین کے پاس سب کے لیے وقت ہوتا ہے مگر ان کے پاس اپنے لیے وقت نہیں ہوتا ۔ جس کے سبب ان کی جلد روکھی اور بے جان ہو جاتی ہے ۔ ان سے جب اس حوالے سے کچھ کہا جائے تو وہ فوراً وقت کی کمی کا رونا رونا شروع کر دیتی ہیں جس کے لیے وہ پارلر جانے کا وقت نہیں نکال پاتی ہیں- لیکن آج ہم گھریلو خواتین کو کچھ ایسے نسخے بتائیں گے جس کے لیے انہیں پارلر جانے کی ضرورت نہیں ہو گی بلکہ گھر کے اندر ہی وہ ان نسخوں کو استعمال کر کے پارلر جیسی تیاری اور چمک دمک حاصل کر سکتی ہیں- 1: ٹماٹر اور کھیرے کے چھلکےٹماٹر کا استعمال ہر گھر میں باقاعدگی سے ہوتا ہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ کھیرا بھی ہر موسم میں گھر میں موجود ہوتا ہے ۔ کھیرے اور ٹماٹر کے چھلکوں کو پھینکنے کے بجائے ایک ساتھ بلینڈر میں بلینڈ کر لیں ۔ اور اس سے بننے والے پیسٹ کو کسی جار میں ڈال کر تین دن کے لیے فریج میں رکھ دیں اس کے بعد دن میں ایک بار اس پیسٹ کو چہرے پر لگا لیں اور سوکھنے کے لیے چھوڑ دیں- اس کے بعد تازہ پانی سے منہ دھو لیں اس سے نہ صرف چھائیوں کا خاتمہ ہو گا بلکہ جلد کی چمک دمک بھی بحال ہو گی –

 2: کیلے کے چھلکےعام طور پر کیلے کے چھلکے کھانے کے بعد سب ہی پھینک دیتے ہیں جب کہ یہ کیلے کے چھلکے اپنے اندر پوٹاشیم کا خزانہ رکھتے ہیں- ان چھلکوں کو دانتوں پر ملنے سے دانت سفید اور مضبوط ہو جاتے ہیں اور ان کو قدرتی تحفظ حاصل ہوتا ہے ۔ اس کے علاوہ کیلے کے چھلکے وٹامن سے بھی بھرپور ہوتے ہیں اور ان کو چہرے پر رگڑنے سے یہ قدرتی اسکرب کا کام کرتے ہیں اور اس سے جلد کے مردہ سیل صاف ہو جاتے ہیں کیل مہاسوں کا خاتمہ ہوتا ہے-

 3: نارنگی کے چھلکےنارنگی کے چھلکے وٹامن سی سے بھرپور ہوتے ہیں ان کو دھوپ میں سکھا کر ان کا پاؤڈر بنا کر سال کے بارہ مہینے استعمال کیا جا سکتا ہے ۔ یہ قدرتی طور پر بہترین سن اسکرین کے طور پر کام کرتے ہیں ۔ اسکے علاوہ اس کا پانی کے ساتھ ملا کر پیسٹ بھی بنایا جا سکتا ہے جو کہ قدرتی ماسک کے طور پر کام کرتا ہے-

 4: آلو کے چھلکےآلو کا شمار اس سبزی میں ہوتا ہے جو کہ سال کے بارہ مہینے استعمال ہوتی ہے اس کے چھلکے غذائیت سے بھرپور ہوتے ہیں ان چھلکوں کو ضائع کرنے کے بجائے اگر آنکھوں پر لگائے جائيں تو یہ نہ صرف آنکھوں کی تھکن کم کرتے ہیں بلکہ پپوٹوں کا بھاری ہونا ، آنکھوں کے نیچے حلقوں کے پڑ جانے کو بھی ختم کرتے ہیں-

 5: کھٹے دہی کا استعمالبعض اوقات دہی پڑا پڑا کھٹا ہوجاتا ہے اور اکثر خواتین اس دہی کی کڑی بنا لیتی ہیں ۔ اس دہی سے چہرے کے غیر ضروری بالوں کا خاتمہ بھی کیا جا سکتا ہے اس کے لیے دہی کے اندر تھوڑی مقدار میں بیسن اور ہلدی شامل کر کے پیسٹ بنا لیں اور اس پیسٹ کو چہرے پر لگا لیں ۔ اور خشک ہونے تک کے لیے چھوڑ دیں جب اچھی طرح خشک ہو جائے تو اس کو مل کر اتار لیں اس سے غیر ضروری بال قدرتی طور پر اتر جائيں گے-

اکثر گھریلو خواتین کے پاس سب کے لیے وقت ہوتا ہے مگر ان کے پاس اپنے لیے وقت نہیں ہوتا ۔ جس کے سبب ان کی جلد روکھی اور بے جان ہو جاتی ہے ۔ ان سے جب اس حوالے سے کچھ کہا جائے تو وہ فوراً وقت کی کمی کا رونا رونا شروع کر دیتی ہیں جس کے لیے وہ پارلر جانے کا وقت نہیں نکال پاتی ہیں- لیکن آج ہم گھریلو خواتین کو کچھ ایسے نسخے بتائیں گے جس کے لیے انہیں پارلر جانے کی ضرورت نہیں ہو گی بلکہ گھر کے اندر ہی وہ ان نسخوں کو استعمال کر کے پارلر جیسی تیاری اور چمک دمک حاصل کر سکتی ہیں- 1: ٹماٹر اور کھیرے کے چھلکےٹماٹر کا استعمال ہر گھر میں باقاعدگی سے ہوتا ہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ کھیرا بھی ہر موسم میں گھر میں موجود ہوتا ہے ۔ کھیرے اور ٹماٹر کے چھلکوں کو پھینکنے کے بجائے ایک ساتھ بلینڈر میں بلینڈ کر لیں ۔ اور اس سے بننے والے پیسٹ کو کسی جار میں ڈال کر تین دن کے لیے فریج میں رکھ دیں اس کے بعد دن میں ایک بار اس پیسٹ کو چہرے پر لگا لیں اور سوکھنے کے لیے چھوڑ دیں- اس کے بعد تازہ پانی سے منہ دھو لیں اس سے نہ صرف چھائیوں کا خاتمہ ہو گا بلکہ جلد کی چمک دمک بھی بحال ہو گی –

 2: کیلے کے چھلکےعام طور پر کیلے کے چھلکے کھانے کے بعد سب ہی پھینک دیتے ہیں جب کہ یہ کیلے کے چھلکے اپنے اندر پوٹاشیم کا خزانہ رکھتے ہیں- ان چھلکوں کو دانتوں پر ملنے سے دانت سفید اور مضبوط ہو جاتے ہیں اور ان کو قدرتی تحفظ حاصل ہوتا ہے ۔ اس کے علاوہ کیلے کے چھلکے وٹامن سے بھی بھرپور ہوتے ہیں اور ان کو چہرے پر رگڑنے سے یہ قدرتی اسکرب کا کام کرتے ہیں اور اس سے جلد کے مردہ سیل صاف ہو جاتے ہیں کیل مہاسوں کا خاتمہ ہوتا ہے-

 3: نارنگی کے چھلکےنارنگی کے چھلکے وٹامن سی سے بھرپور ہوتے ہیں ان کو دھوپ میں سکھا کر ان کا پاؤڈر بنا کر سال کے بارہ مہینے استعمال کیا جا سکتا ہے ۔ یہ قدرتی طور پر بہترین سن اسکرین کے طور پر کام کرتے ہیں ۔ اسکے علاوہ اس کا پانی کے ساتھ ملا کر پیسٹ بھی بنایا جا سکتا ہے جو کہ قدرتی ماسک کے طور پر کام کرتا ہے-

 4: آلو کے چھلکےآلو کا شمار اس سبزی میں ہوتا ہے جو کہ سال کے بارہ مہینے استعمال ہوتی ہے اس کے چھلکے غذائیت سے بھرپور ہوتے ہیں ان چھلکوں کو ضائع کرنے کے بجائے اگر آنکھوں پر لگائے جائيں تو یہ نہ صرف آنکھوں کی تھکن کم کرتے ہیں بلکہ پپوٹوں کا بھاری ہونا ، آنکھوں کے نیچے حلقوں کے پڑ جانے کو بھی ختم کرتے ہیں-

 5: کھٹے دہی کا استعمالبعض اوقات دہی پڑا پڑا کھٹا ہوجاتا ہے اور اکثر خواتین اس دہی کی کڑی بنا لیتی ہیں ۔ اس دہی سے چہرے کے غیر ضروری بالوں کا خاتمہ بھی کیا جا سکتا ہے اس کے لیے دہی کے اندر تھوڑی مقدار میں بیسن اور ہلدی شامل کر کے پیسٹ بنا لیں اور اس پیسٹ کو چہرے پر لگا لیں ۔ اور خشک ہونے تک کے لیے چھوڑ دیں جب اچھی طرح خشک ہو جائے تو اس کو مل کر اتار لیں اس سے غیر ضروری بال قدرتی طور پر اتر جائيں گے-

اکثر گھریلو خواتین کے پاس سب کے لیے وقت ہوتا ہے مگر ان کے پاس اپنے لیے وقت نہیں ہوتا ۔ جس کے سبب ان کی جلد روکھی اور بے جان ہو جاتی ہے ۔ ان سے جب اس حوالے سے کچھ کہا جائے تو وہ فوراً وقت کی کمی کا رونا رونا شروع کر دیتی ہیں جس کے لیے وہ پارلر جانے کا وقت نہیں نکال پاتی ہیں- لیکن آج ہم گھریلو خواتین کو کچھ ایسے نسخے بتائیں گے جس کے لیے انہیں پارلر جانے کی ضرورت نہیں ہو گی بلکہ گھر کے اندر ہی وہ ان نسخوں کو استعمال کر کے پارلر جیسی تیاری اور چمک دمک حاصل کر سکتی ہیں- 1: ٹماٹر اور کھیرے کے چھلکےٹماٹر کا استعمال ہر گھر میں باقاعدگی سے ہوتا ہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ کھیرا بھی ہر موسم میں گھر میں موجود ہوتا ہے ۔ کھیرے اور ٹماٹر کے چھلکوں کو پھینکنے کے بجائے ایک ساتھ بلینڈر میں بلینڈ کر لیں ۔ اور اس سے بننے والے پیسٹ کو کسی جار میں ڈال کر تین دن کے لیے فریج میں رکھ دیں اس کے بعد دن میں ایک بار اس پیسٹ کو چہرے پر لگا لیں اور سوکھنے کے لیے چھوڑ دیں- اس کے بعد تازہ پانی سے منہ دھو لیں اس سے نہ صرف چھائیوں کا خاتمہ ہو گا بلکہ جلد کی چمک دمک بھی بحال ہو گی –

 2: کیلے کے چھلکےعام طور پر کیلے کے چھلکے کھانے کے بعد سب ہی پھینک دیتے ہیں جب کہ یہ کیلے کے چھلکے اپنے اندر پوٹاشیم کا خزانہ رکھتے ہیں- ان چھلکوں کو دانتوں پر ملنے سے دانت سفید اور مضبوط ہو جاتے ہیں اور ان کو قدرتی تحفظ حاصل ہوتا ہے ۔ اس کے علاوہ کیلے کے چھلکے وٹامن سے بھی بھرپور ہوتے ہیں اور ان کو چہرے پر رگڑنے سے یہ قدرتی اسکرب کا کام کرتے ہیں اور اس سے جلد کے مردہ سیل صاف ہو جاتے ہیں کیل مہاسوں کا خاتمہ ہوتا ہے-

 3: نارنگی کے چھلکےنارنگی کے چھلکے وٹامن سی سے بھرپور ہوتے ہیں ان کو دھوپ میں سکھا کر ان کا پاؤڈر بنا کر سال کے بارہ مہینے استعمال کیا جا سکتا ہے ۔ یہ قدرتی طور پر بہترین سن اسکرین کے طور پر کام کرتے ہیں ۔ اسکے علاوہ اس کا پانی کے ساتھ ملا کر پیسٹ بھی بنایا جا سکتا ہے جو کہ قدرتی ماسک کے طور پر کام کرتا ہے-

 4: آلو کے چھلکےآلو کا شمار اس سبزی میں ہوتا ہے جو کہ سال کے بارہ مہینے استعمال ہوتی ہے اس کے چھلکے غذائیت سے بھرپور ہوتے ہیں ان چھلکوں کو ضائع کرنے کے بجائے اگر آنکھوں پر لگائے جائيں تو یہ نہ صرف آنکھوں کی تھکن کم کرتے ہیں بلکہ پپوٹوں کا بھاری ہونا ، آنکھوں کے نیچے حلقوں کے پڑ جانے کو بھی ختم کرتے ہیں-

 5: کھٹے دہی کا استعمالبعض اوقات دہی پڑا پڑا کھٹا ہوجاتا ہے اور اکثر خواتین اس دہی کی کڑی بنا لیتی ہیں ۔ اس دہی سے چہرے کے غیر ضروری بالوں کا خاتمہ بھی کیا جا سکتا ہے اس کے لیے دہی کے اندر تھوڑی مقدار میں بیسن اور ہلدی شامل کر کے پیسٹ بنا لیں اور اس پیسٹ کو چہرے پر لگا لیں ۔ اور خشک ہونے تک کے لیے چھوڑ دیں جب اچھی طرح خشک ہو جائے تو اس کو مل کر اتار لیں اس سے غیر ضروری بال قدرتی طور پر اتر جائيں گے-

Related Articles

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Stay Connected

22,046FansLike
2,986FollowersFollow
18,400SubscribersSubscribe

Latest Articles