25 C
Lahore
Tuesday, October 19, 2021

لوگ آخر اس شہر کو چھوڑ کیوں نہیں دیتے؟ چین میں پایا جانے والا دنیا کا تنگ ترین شہر

دنیا کے سپر پاور ملکوں میں شمار ہونے والا ملک چین اپنی خوبصورتی کی وجہ سے بھی دنیا میں جانا جاتا ہے۔ چین کے صوبے یونان کے پہاڑوں کے درمیان دریائے نانسی کے کنارے پر آباد یانجن نامی یہ شہر دنیا کے سب سے زیادہ تنگ شہروں کی فہرست میں شامل ہے۔

اس شہر کو جب اُونچائی سے دیکھا جائے۔ تو اس بات پر یقین کرنا مشکل ہو جاتا ہے کہ، یہاں انسانی زندگی بھی سانس لیتی ہے۔ خطرناک پہاڑوں کے درمیان دریائے نانسی کے پانیوں کو برداشت کرتا ہوا۔ یانجن نامی یہ شہر اس وقت چار لاکھ اور پچاس ہزار کی آبادی کو اپنے اندر سمیٹے ہوئے ہے۔

سب سے زیادہ مزے کی بات یہ ہے کہ جب اس شہر کو پہاڑوں سے دیکھا جائے، تو یہ کسی فلم کے خوبصورت سین سے کم نہیں لگتا۔

:یانجن کاؤنٹی کا رقبہ

یانجن کاؤنٹی کی چوڑائی صرف 30 میٹر ہے۔ اس شہر کا سب سے بڑے پیمانے پر حصہ 300 میٹر کے رقبے پر پھیلا ہوا ہے۔ اس شہر میں صرف ایک ہی سڑک موجود ہے۔ کیونکہ شہر دریا کے کنارے کئی کلومیٹر دور تک پھیلا ہوا ہے۔ شہر کو پہلی دفعہ دیکھیں تو ایسا لگتا ہے کہ یہاں پل اتنے زیادہ نہیں ہیں۔

شہر بہت زیادہ تنگ ہے اسی لیے یہاں زمین کی بہت زیاہ قدر ہے۔ جگہ کم ہونے کی وجہ سے دریا کے کنارے رہائش کے لیے بلڈنگ بھی تعمیر کی گئی ہے۔ جس کی بنیاد بانسوں کے ستونوں پر رکھی گئی ہے۔ بانس کے ستون اس لیے کہ جب دریا میں سیلاب آئے، تو اس سے حفاظت ممکن ہو۔

:آبادی کی یہاں رہنے کی وجہ اور ان کی پریشانی

چین کی جانب سے اس شہر کی پچھلے کئی سالوں سے تصویریں لی جا رہی ہیں۔ انہیں سوشل میڈیا پر بھی شئیر کیا جا رہا ہے۔ ان تصویروں کو دیکھتے ہوئے کئی لوگوں کا چینی حکومت سے یہ سوال لازمی ہوتا ہے۔ کہ اگر یہ شہر اتنا زیادہ تنگ ہے، تو لوگ اس شہر کو چھوڑ کیوں نہیں دیتے۔ کیونکہ چین میں تو بہت سی جگہ ایسی ہے، جو ابھی تک آباد نہیں ہے۔ مگر حقیقت یہ ہے کہ یانجن کاؤنٹی کی آبادی یہاں کئی صدیوں سے آباد ہے۔ اسی لیے وہ اپنے آباؤاجداد کی زمین کو چھوڑنا نہیں چاہتے۔

یہ شہر تو بہت خوبصورت ہے۔ مگر پریشانی کی بات یہ ہے، کہ اس شہر کا نقشہ اس کی معاشی ترقی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔ یانجن کاؤنٹی بلند پہاڑوں کے درمیان آباد ہے۔ اسی لیے اس شہر میں صرف ایک ہی سڑک ہے۔ لہذاً شہر کے لوگوں کا یانجن کاؤنٹی تک پہنچنا بہت مشکل ہوتا ہے۔

دنیا کے سپر پاور ملکوں میں شمار ہونے والا ملک چین اپنی خوبصورتی کی وجہ سے بھی دنیا میں جانا جاتا ہے۔ چین کے صوبے یونان کے پہاڑوں کے درمیان دریائے نانسی کے کنارے پر آباد یانجن نامی یہ شہر دنیا کے سب سے زیادہ تنگ شہروں کی فہرست میں شامل ہے۔

اس شہر کو جب اُونچائی سے دیکھا جائے۔ تو اس بات پر یقین کرنا مشکل ہو جاتا ہے کہ، یہاں انسانی زندگی بھی سانس لیتی ہے۔ خطرناک پہاڑوں کے درمیان دریائے نانسی کے پانیوں کو برداشت کرتا ہوا۔ یانجن نامی یہ شہر اس وقت چار لاکھ اور پچاس ہزار کی آبادی کو اپنے اندر سمیٹے ہوئے ہے۔

سب سے زیادہ مزے کی بات یہ ہے کہ جب اس شہر کو پہاڑوں سے دیکھا جائے، تو یہ کسی فلم کے خوبصورت سین سے کم نہیں لگتا۔

:یانجن کاؤنٹی کا رقبہ

یانجن کاؤنٹی کی چوڑائی صرف 30 میٹر ہے۔ اس شہر کا سب سے بڑے پیمانے پر حصہ 300 میٹر کے رقبے پر پھیلا ہوا ہے۔ اس شہر میں صرف ایک ہی سڑک موجود ہے۔ کیونکہ شہر دریا کے کنارے کئی کلومیٹر دور تک پھیلا ہوا ہے۔ شہر کو پہلی دفعہ دیکھیں تو ایسا لگتا ہے کہ یہاں پل اتنے زیادہ نہیں ہیں۔

شہر بہت زیادہ تنگ ہے اسی لیے یہاں زمین کی بہت زیاہ قدر ہے۔ جگہ کم ہونے کی وجہ سے دریا کے کنارے رہائش کے لیے بلڈنگ بھی تعمیر کی گئی ہے۔ جس کی بنیاد بانسوں کے ستونوں پر رکھی گئی ہے۔ بانس کے ستون اس لیے کہ جب دریا میں سیلاب آئے، تو اس سے حفاظت ممکن ہو۔

:آبادی کی یہاں رہنے کی وجہ اور ان کی پریشانی

چین کی جانب سے اس شہر کی پچھلے کئی سالوں سے تصویریں لی جا رہی ہیں۔ انہیں سوشل میڈیا پر بھی شئیر کیا جا رہا ہے۔ ان تصویروں کو دیکھتے ہوئے کئی لوگوں کا چینی حکومت سے یہ سوال لازمی ہوتا ہے۔ کہ اگر یہ شہر اتنا زیادہ تنگ ہے، تو لوگ اس شہر کو چھوڑ کیوں نہیں دیتے۔ کیونکہ چین میں تو بہت سی جگہ ایسی ہے، جو ابھی تک آباد نہیں ہے۔ مگر حقیقت یہ ہے کہ یانجن کاؤنٹی کی آبادی یہاں کئی صدیوں سے آباد ہے۔ اسی لیے وہ اپنے آباؤاجداد کی زمین کو چھوڑنا نہیں چاہتے۔

یہ شہر تو بہت خوبصورت ہے۔ مگر پریشانی کی بات یہ ہے، کہ اس شہر کا نقشہ اس کی معاشی ترقی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔ یانجن کاؤنٹی بلند پہاڑوں کے درمیان آباد ہے۔ اسی لیے اس شہر میں صرف ایک ہی سڑک ہے۔ لہذاً شہر کے لوگوں کا یانجن کاؤنٹی تک پہنچنا بہت مشکل ہوتا ہے۔

دنیا کے سپر پاور ملکوں میں شمار ہونے والا ملک چین اپنی خوبصورتی کی وجہ سے بھی دنیا میں جانا جاتا ہے۔ چین کے صوبے یونان کے پہاڑوں کے درمیان دریائے نانسی کے کنارے پر آباد یانجن نامی یہ شہر دنیا کے سب سے زیادہ تنگ شہروں کی فہرست میں شامل ہے۔

اس شہر کو جب اُونچائی سے دیکھا جائے۔ تو اس بات پر یقین کرنا مشکل ہو جاتا ہے کہ، یہاں انسانی زندگی بھی سانس لیتی ہے۔ خطرناک پہاڑوں کے درمیان دریائے نانسی کے پانیوں کو برداشت کرتا ہوا۔ یانجن نامی یہ شہر اس وقت چار لاکھ اور پچاس ہزار کی آبادی کو اپنے اندر سمیٹے ہوئے ہے۔

سب سے زیادہ مزے کی بات یہ ہے کہ جب اس شہر کو پہاڑوں سے دیکھا جائے، تو یہ کسی فلم کے خوبصورت سین سے کم نہیں لگتا۔

:یانجن کاؤنٹی کا رقبہ

یانجن کاؤنٹی کی چوڑائی صرف 30 میٹر ہے۔ اس شہر کا سب سے بڑے پیمانے پر حصہ 300 میٹر کے رقبے پر پھیلا ہوا ہے۔ اس شہر میں صرف ایک ہی سڑک موجود ہے۔ کیونکہ شہر دریا کے کنارے کئی کلومیٹر دور تک پھیلا ہوا ہے۔ شہر کو پہلی دفعہ دیکھیں تو ایسا لگتا ہے کہ یہاں پل اتنے زیادہ نہیں ہیں۔

شہر بہت زیادہ تنگ ہے اسی لیے یہاں زمین کی بہت زیاہ قدر ہے۔ جگہ کم ہونے کی وجہ سے دریا کے کنارے رہائش کے لیے بلڈنگ بھی تعمیر کی گئی ہے۔ جس کی بنیاد بانسوں کے ستونوں پر رکھی گئی ہے۔ بانس کے ستون اس لیے کہ جب دریا میں سیلاب آئے، تو اس سے حفاظت ممکن ہو۔

:آبادی کی یہاں رہنے کی وجہ اور ان کی پریشانی

چین کی جانب سے اس شہر کی پچھلے کئی سالوں سے تصویریں لی جا رہی ہیں۔ انہیں سوشل میڈیا پر بھی شئیر کیا جا رہا ہے۔ ان تصویروں کو دیکھتے ہوئے کئی لوگوں کا چینی حکومت سے یہ سوال لازمی ہوتا ہے۔ کہ اگر یہ شہر اتنا زیادہ تنگ ہے، تو لوگ اس شہر کو چھوڑ کیوں نہیں دیتے۔ کیونکہ چین میں تو بہت سی جگہ ایسی ہے، جو ابھی تک آباد نہیں ہے۔ مگر حقیقت یہ ہے کہ یانجن کاؤنٹی کی آبادی یہاں کئی صدیوں سے آباد ہے۔ اسی لیے وہ اپنے آباؤاجداد کی زمین کو چھوڑنا نہیں چاہتے۔

یہ شہر تو بہت خوبصورت ہے۔ مگر پریشانی کی بات یہ ہے، کہ اس شہر کا نقشہ اس کی معاشی ترقی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔ یانجن کاؤنٹی بلند پہاڑوں کے درمیان آباد ہے۔ اسی لیے اس شہر میں صرف ایک ہی سڑک ہے۔ لہذاً شہر کے لوگوں کا یانجن کاؤنٹی تک پہنچنا بہت مشکل ہوتا ہے۔

Related Articles

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Stay Connected

22,046FansLike
2,984FollowersFollow
18,400SubscribersSubscribe

Latest Articles