30 C
Lahore
Tuesday, October 19, 2021

کہیں مچھلیوں کی برسات، کہیں ناک سے دودھ پیتے لوگ

آئے روز دنیا میں کوئی نہ کوئی دلچسپ و عجیب واقعات دیکھنے کا ملتے ہیں۔ اس طرح کے واقعات کو جب ہم دیکھتے ہیں، تو پم حیرت میں مبتلا ہو جاتے ہیں۔ لیکن کچھ ایسے بھی ہوتے ہیں جو ہماری سمجھ کے دائرے سے بھی باہر ہیں۔۔

وسطی امریکہ کے ملک ہوندراس میں، سال میں 2 دفعہ مچھلیوں کی بارش ہوتی ہے، مچھلیوں کی برسات کی سب سے بڑی وجہ یہ ہے، کہ یہاں کے سمندروں میں طوفان بہت زیادہ آتے ہیں۔ اسی وجہ سے سمندروں میں ایک واٹر سائیکلون بنتا ہے۔

اس وجہ سے سمندر کا پانی بھاپ بن کر آسمان کی طرف اُٹھتا ہے۔ اس میں اتنی شدت ہوتی ہے، کہ پانی کے ساتھ مچھلیاں بھی آسمان کی طرف اُٹھتی ہیں۔ اور جب پانی واپس زمین پر آتا ہے، تو مچھلیوں کی برسات ہوتی ہے۔

ترکی کے ایک شہری کو قدرت کی طرف سے یہ صلاحیت ملی ہے، کہ وہ اپنی آنکھ کی مدد سے دس فٹ تک دور پانی پھینک سکتا ہے۔ اسی کے ساتھ امریکہ کا ایک شخص اپنی ناک کی مدد سے دودھ پیتا بھی ہے اور ناک کی مدد سے ہی دودھ کو کئی فٹ تک دور پھینکنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

یاد رہے کہ ماضی میں بھی الفریڈ نامی ایک شخص اپنی آنکھ کی مدد سے باجا بجایا کرتا تھا۔ دراصل ہماری آنکھوں میں ایک چھوٹا سا ڈکٹ ہوتا ہے، ج سکی مدد سے آنسو باہر نکلتے ہیں۔ انہیں ڈکٹ میں سے ہوا بھی نکلتی ہے۔ اسی ہوا کی مدد سے الفریڈ نامی شخص باجا بجایا کرتا تھا۔

آئے روز دنیا میں کوئی نہ کوئی دلچسپ و عجیب واقعات دیکھنے کا ملتے ہیں۔ اس طرح کے واقعات کو جب ہم دیکھتے ہیں، تو پم حیرت میں مبتلا ہو جاتے ہیں۔ لیکن کچھ ایسے بھی ہوتے ہیں جو ہماری سمجھ کے دائرے سے بھی باہر ہیں۔۔

وسطی امریکہ کے ملک ہوندراس میں، سال میں 2 دفعہ مچھلیوں کی بارش ہوتی ہے، مچھلیوں کی برسات کی سب سے بڑی وجہ یہ ہے، کہ یہاں کے سمندروں میں طوفان بہت زیادہ آتے ہیں۔ اسی وجہ سے سمندروں میں ایک واٹر سائیکلون بنتا ہے۔

اس وجہ سے سمندر کا پانی بھاپ بن کر آسمان کی طرف اُٹھتا ہے۔ اس میں اتنی شدت ہوتی ہے، کہ پانی کے ساتھ مچھلیاں بھی آسمان کی طرف اُٹھتی ہیں۔ اور جب پانی واپس زمین پر آتا ہے، تو مچھلیوں کی برسات ہوتی ہے۔

ترکی کے ایک شہری کو قدرت کی طرف سے یہ صلاحیت ملی ہے، کہ وہ اپنی آنکھ کی مدد سے دس فٹ تک دور پانی پھینک سکتا ہے۔ اسی کے ساتھ امریکہ کا ایک شخص اپنی ناک کی مدد سے دودھ پیتا بھی ہے اور ناک کی مدد سے ہی دودھ کو کئی فٹ تک دور پھینکنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

یاد رہے کہ ماضی میں بھی الفریڈ نامی ایک شخص اپنی آنکھ کی مدد سے باجا بجایا کرتا تھا۔ دراصل ہماری آنکھوں میں ایک چھوٹا سا ڈکٹ ہوتا ہے، ج سکی مدد سے آنسو باہر نکلتے ہیں۔ انہیں ڈکٹ میں سے ہوا بھی نکلتی ہے۔ اسی ہوا کی مدد سے الفریڈ نامی شخص باجا بجایا کرتا تھا۔

آئے روز دنیا میں کوئی نہ کوئی دلچسپ و عجیب واقعات دیکھنے کا ملتے ہیں۔ اس طرح کے واقعات کو جب ہم دیکھتے ہیں، تو پم حیرت میں مبتلا ہو جاتے ہیں۔ لیکن کچھ ایسے بھی ہوتے ہیں جو ہماری سمجھ کے دائرے سے بھی باہر ہیں۔۔

وسطی امریکہ کے ملک ہوندراس میں، سال میں 2 دفعہ مچھلیوں کی بارش ہوتی ہے، مچھلیوں کی برسات کی سب سے بڑی وجہ یہ ہے، کہ یہاں کے سمندروں میں طوفان بہت زیادہ آتے ہیں۔ اسی وجہ سے سمندروں میں ایک واٹر سائیکلون بنتا ہے۔

اس وجہ سے سمندر کا پانی بھاپ بن کر آسمان کی طرف اُٹھتا ہے۔ اس میں اتنی شدت ہوتی ہے، کہ پانی کے ساتھ مچھلیاں بھی آسمان کی طرف اُٹھتی ہیں۔ اور جب پانی واپس زمین پر آتا ہے، تو مچھلیوں کی برسات ہوتی ہے۔

ترکی کے ایک شہری کو قدرت کی طرف سے یہ صلاحیت ملی ہے، کہ وہ اپنی آنکھ کی مدد سے دس فٹ تک دور پانی پھینک سکتا ہے۔ اسی کے ساتھ امریکہ کا ایک شخص اپنی ناک کی مدد سے دودھ پیتا بھی ہے اور ناک کی مدد سے ہی دودھ کو کئی فٹ تک دور پھینکنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

یاد رہے کہ ماضی میں بھی الفریڈ نامی ایک شخص اپنی آنکھ کی مدد سے باجا بجایا کرتا تھا۔ دراصل ہماری آنکھوں میں ایک چھوٹا سا ڈکٹ ہوتا ہے، ج سکی مدد سے آنسو باہر نکلتے ہیں۔ انہیں ڈکٹ میں سے ہوا بھی نکلتی ہے۔ اسی ہوا کی مدد سے الفریڈ نامی شخص باجا بجایا کرتا تھا۔

Related Articles

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Stay Connected

22,046FansLike
2,986FollowersFollow
18,400SubscribersSubscribe

Latest Articles