25 C
Lahore
Tuesday, October 19, 2021

یوٹیوب سے پیسے کمانے والوں کے لئے بُری خبر

یوٹیوبرز کے لئے نئی مشکل پیدا ہو گئی، یوٹیوب نے غیر امریکی یوٹیوبرز پر ٹیکس لگانے کا فیصلہ کر لیا۔

رپورٹ کے مطابق یوٹیوب نے ایک بڑا فیصلہ لے لیا، انٹرنیٹ کے سب سے بڑے سرچ انجن گوگل کے ماتحت ادارے و ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ یوٹیوب کا غیر امریکی یوٹیوبرز پر ٹیکس لگانے کا ایک خحطرناک فیصلہ کر لیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق تاہم ٹیکس پالیسی کے آغاز کے حوالے سے یوٹیوب نے ای میل کے ذریعے تمام یوٹیوبرز کو پہلے ہی آگاہ کر دیا ہے کہ اس نئی پالیسی کا آغاز جون 2021 سے ہو گا۔

یویٹوب نے ویڈیوز کریٹرز سے مطالبہ بھی کیا ہے کہ وہ اپنے ٹیکسز کے بارے میں تمام تفصیلات ”ایڈسینس” میں اپڈیٹ کریں تاکہ ٹیکس کی کٹوتی کے صحیح مقدار کا مطالعہ کیا جا سکے، واضع رہے کہ اس تبدیلی کا آغاز امریکہ میں رہائش پذیر یوٹیوبرز کو علیدہ کر کے دنیا بھر کے یوٹیوبرز پرلاگو ہو گا۔

اس حوالے سے یوٹیوب کی طرف سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ ”گوگل کی ذمہ داری ہے کہ وہ امریکی قانون کے تحت ٹیکس سے متعلق معلومات کو جمع کرے”۔

جبکہ گوگل کی جانب سے آگاہ کیا گیا ہے کہ اگر کوئی کریٹر 31 مئی تک معلومات کی تمام تفصیلات فراہم نہیں کرے گا تو اس کی آمدنی کا 24 فیصد حصہ ضبط کر لیا جائے گا۔

یاد رہے کہ پاکستان سمیت دنیا بھرکے تمام یوٹیوبرزجومختلف مواد کریٹ کرکے اپ لوڈ کرنے کا رجحان رکھتے ہیں تاہم اب یوٹیوبرز کو ٹیکس کی ادائیگی یقینی بنانی ہوگی ورنہ ان کا یوٹیوب اکاؤنٹ بند کر دیا جائے گا۔

یوٹیوبرز کے لئے نئی مشکل پیدا ہو گئی، یوٹیوب نے غیر امریکی یوٹیوبرز پر ٹیکس لگانے کا فیصلہ کر لیا۔

رپورٹ کے مطابق یوٹیوب نے ایک بڑا فیصلہ لے لیا، انٹرنیٹ کے سب سے بڑے سرچ انجن گوگل کے ماتحت ادارے و ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ یوٹیوب کا غیر امریکی یوٹیوبرز پر ٹیکس لگانے کا ایک خحطرناک فیصلہ کر لیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق تاہم ٹیکس پالیسی کے آغاز کے حوالے سے یوٹیوب نے ای میل کے ذریعے تمام یوٹیوبرز کو پہلے ہی آگاہ کر دیا ہے کہ اس نئی پالیسی کا آغاز جون 2021 سے ہو گا۔

یویٹوب نے ویڈیوز کریٹرز سے مطالبہ بھی کیا ہے کہ وہ اپنے ٹیکسز کے بارے میں تمام تفصیلات ”ایڈسینس” میں اپڈیٹ کریں تاکہ ٹیکس کی کٹوتی کے صحیح مقدار کا مطالعہ کیا جا سکے، واضع رہے کہ اس تبدیلی کا آغاز امریکہ میں رہائش پذیر یوٹیوبرز کو علیدہ کر کے دنیا بھر کے یوٹیوبرز پرلاگو ہو گا۔

اس حوالے سے یوٹیوب کی طرف سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ ”گوگل کی ذمہ داری ہے کہ وہ امریکی قانون کے تحت ٹیکس سے متعلق معلومات کو جمع کرے”۔

جبکہ گوگل کی جانب سے آگاہ کیا گیا ہے کہ اگر کوئی کریٹر 31 مئی تک معلومات کی تمام تفصیلات فراہم نہیں کرے گا تو اس کی آمدنی کا 24 فیصد حصہ ضبط کر لیا جائے گا۔

یاد رہے کہ پاکستان سمیت دنیا بھرکے تمام یوٹیوبرزجومختلف مواد کریٹ کرکے اپ لوڈ کرنے کا رجحان رکھتے ہیں تاہم اب یوٹیوبرز کو ٹیکس کی ادائیگی یقینی بنانی ہوگی ورنہ ان کا یوٹیوب اکاؤنٹ بند کر دیا جائے گا۔

یوٹیوبرز کے لئے نئی مشکل پیدا ہو گئی، یوٹیوب نے غیر امریکی یوٹیوبرز پر ٹیکس لگانے کا فیصلہ کر لیا۔

رپورٹ کے مطابق یوٹیوب نے ایک بڑا فیصلہ لے لیا، انٹرنیٹ کے سب سے بڑے سرچ انجن گوگل کے ماتحت ادارے و ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ یوٹیوب کا غیر امریکی یوٹیوبرز پر ٹیکس لگانے کا ایک خحطرناک فیصلہ کر لیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق تاہم ٹیکس پالیسی کے آغاز کے حوالے سے یوٹیوب نے ای میل کے ذریعے تمام یوٹیوبرز کو پہلے ہی آگاہ کر دیا ہے کہ اس نئی پالیسی کا آغاز جون 2021 سے ہو گا۔

یویٹوب نے ویڈیوز کریٹرز سے مطالبہ بھی کیا ہے کہ وہ اپنے ٹیکسز کے بارے میں تمام تفصیلات ”ایڈسینس” میں اپڈیٹ کریں تاکہ ٹیکس کی کٹوتی کے صحیح مقدار کا مطالعہ کیا جا سکے، واضع رہے کہ اس تبدیلی کا آغاز امریکہ میں رہائش پذیر یوٹیوبرز کو علیدہ کر کے دنیا بھر کے یوٹیوبرز پرلاگو ہو گا۔

اس حوالے سے یوٹیوب کی طرف سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ ”گوگل کی ذمہ داری ہے کہ وہ امریکی قانون کے تحت ٹیکس سے متعلق معلومات کو جمع کرے”۔

جبکہ گوگل کی جانب سے آگاہ کیا گیا ہے کہ اگر کوئی کریٹر 31 مئی تک معلومات کی تمام تفصیلات فراہم نہیں کرے گا تو اس کی آمدنی کا 24 فیصد حصہ ضبط کر لیا جائے گا۔

یاد رہے کہ پاکستان سمیت دنیا بھرکے تمام یوٹیوبرزجومختلف مواد کریٹ کرکے اپ لوڈ کرنے کا رجحان رکھتے ہیں تاہم اب یوٹیوبرز کو ٹیکس کی ادائیگی یقینی بنانی ہوگی ورنہ ان کا یوٹیوب اکاؤنٹ بند کر دیا جائے گا۔

Related Articles

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Stay Connected

22,046FansLike
2,984FollowersFollow
18,400SubscribersSubscribe

Latest Articles